Lyrics – Saadat-e-Karbala – Nadeem Sarwar 1990

صحفہ اول / اردو نوحے / سید ندیم رضا سرور / سادات کربلا

سید ندیم رضا سرور
سید ندیم رضا سرور

شاعر : انیس
نوحہ خواں : ندیم رضا سرور
سال : 1990
کمپوزر : زین عباس
اس نوحے کے تحریر کرنے میں اگر کوئی غلطی سرزد ہوگئی ہوں تو اس کے لیے میں معذرت خواہ ہوں۔

یہ نوحہ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے نیچے دئیے گئے لنک پر کلک کریں
سادات کربلا.MP3
(Right Click / Save Target as or copy paste the link into new browser)


سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

ہر بی بی کررہی تھی کچھ اس طرح سے گریہ

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

کچھ بیبیاں یہاں ہیں کچھ بیبیاں وہاں
کرتی ہوئ فغاں
ارے بکھری ہوئ تھیں مقتل سرور میں جا بجا

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

اک بی بی دشت خونی میں جاتی ہے نہر پر
کہتی با چشمہ تر
ارے عباس دینے آئ ہوں پرسہ سکینہ کا

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

گھٹ گھٹ کے لاڈلی تیری زنداں میں مرگئ
تربت نہیں بنی
ارے بھیا وہ قید سے نہ ہوئ مر کے بھی جدا

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

اکبر کی قبر پر یوں ہوئیں لیلی نوحہ گر
دیکھا نہ سال بھر
ارے آئ ہوں قید شام سے اب ہو کے میں رہا

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

بانو یہ بین کرتی تھیں اے میرے بے زبان
ماں ڈھونڈے اب کہاں
ارے بتلا دے ہے کہاں میرا اصغر اے کربلا

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

قربان تیرے اے میرے ماں جاۓ بے وطن
مجبور تھی بہن
ارے زنداں میں مجھ سے تیری امانت ہوئ جدا

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

روتے ہيں خاص و عام تیرا سن کے یہ کلام
اے شاہ کے غلام
ارے نوحہ تیرا انیس ہے مقبول بارگاہ

سادات کربلا ‘ سادات کربلا
چہلم کو کربلا میں جب آئيں وہ بیبیاں

شائع کردہ

اپنی راۓ دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s