Wording – Ya Ali Ya Aeliya – Nadeem Sarwar 1986

صحفہ اول / اردو نوحے / سید ندیم رضا سرور / یا علی یا ایـلـیاء

سید ندیم رضا سرور
سید ندیم رضا سرور

شاعر : ریحان اعظمی
نوحہ خواں : ندیم رضا سرور
سال : 1986
کمپوزر : زین عباس
اس نوحے کے تحریر کرنے میں اگر کوئی غلطی سرزد ہوگئی ہوں تو اس کے لیے میں معذرت خواہ ہوں۔

یہ نوحہ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے نیچے دئیے گئے لنک پر کلک کریں
یا علی یا ایــلــیاء یا ابو الحسن یا ابو تراب.MP3
(Right Click / Save Target as or copy paste the link into new browser)


یا علی یا ایلیا یا ابو الحسن یا ابوتراب
بھائ میرا قتل ہوا آئيے بابا شتاب

لو پھیل گيا شام غریباں کا اندھیرا
اسباب لٹا جل گیا سادات کا خیمہ
بے گوروکفن رن میں ہے شبیر کا لاشہ
سب مارے گۓ دشت میں زینب ہوئ تنہا
اصغر بے شیر کو رونے لگی امّ رباب

ماری گئ اک روز میں سب فوج حسینی
ہر لمحہ مصیب تھی نئی ہم نے جو دیکھی
بے مونس و غم خوار تھے یاور نہ تھا کوئ
تھا عصر کا ہنگام کہ آواز یہ گونجی
مارا گيا حیدر کا پسر دشت میں بے آب

ہاۓ وہ بہن جس کے ہوں اٹھارہ برادر
اور باپ بھی جس بیٹی کا ہو فاتح خیبر
نرغے میں لعینوں کے وہ مظلوم کھلے سر
کیسے نہ کرے نوحہ وہ پھر خاک اڑا کر
نوحہ کناں خلد میں ہے روح رسالت مابۖ

کٹ کے جو گرے خاک پہ عباس کے بازو
رکتے ہی نہ تھے آنکھ سے شبیر کے آنسو
میں خیمے میں روتی تھی وہ روتے تھے لب جُو
ماتم ہی تھا ماتم ہی تھا ماتم ہی تھا ہر سو
کہتے تھے شبیر کہ يـالـيـتـني كنت تراب

اکبر کا جگر ہو گيا برچھی سے دوپارہ
اور اصغر مصعوم بھی مارا گيا پیاسا
ٹکڑے ہوۓ میدان میں نوشاہ کا لاشہ
مارا گيا وہ شیر جو تھا سب کا سہارا
عون ومحمد کا ملا خاک میں کیسا شباب

اصغر کے لگا تیر میں روتی رہی بابا
مارے گۓ شبیر میں روتی رہی بابا
ہنستے رہے بے تیر میں روتی رہی بابا
شہہ پہ چلی شمشیر میں روتی رہی بابا
دیکھیے پردیس میں قسمت ہوئ میری خراب

اب بالی سکینہ کو ستاتے ہیں ستمگر
کچھ کر نہیں سکتی کہ رسن بستہ ہے مادر
پابند سلاسل ہے میرا عابد مضطر
زینب کے کلیجہ پہ چلے ظلم کے خنجر
کیا کروں بابا میرے دیجیے کچھ تو جواب

ریحان بہت ہوچکی اب اشک فشانی
زینب پہ مصیبت کی یہ پردرد کہانی
سب اہل عزا سن چکے سرور کی زبانی
تھمتی ہی نہیں آنکھوں سے اشکوں کی روانی
کون سنے قصہ غم کس میں رہی اتنی تاب

یا علی یا ایلیا یا ابو الحسن یا ابوتراب

http://www.xainabbas.wordpress.com

شائع کردہ

اپنی راۓ دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s