Wording – Dua-e-Ali(a.s) – Mesum Abbas 2008

صحفہ اول / اردو نوحے / مـيثم عـباس / دعـاۓ علی علیہ سلام

نوحے خواں مـیـثم عـباس
نوحہ خواں مـیـثم عـباس


شاعر : کلـیم
نوحہ خواں : مـیثم عـباس
سال : 2008
کمپوزر : زین عباس
اس نوحے کے تحریر کرنے میں اگر کوئی غلطی سرزد ہوگئی ہوں تو اس کے لیے میں معذرت خواہ ہوں


یارب میرے یارب
سخی عباس جری یا الہی مجھے دے

ایک سخی چاہیے تاریخ شجاعت کے لیے
کربلا میں میرے شبیر کی نصرت کے لیے
اور ناموس پیعمبرۖ  کی حفاظت کے لیے
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

شکر صد شکر تیرا شبر و شبیر دیئے
بیٹیاں کی ہیں عطا زینب و کلثوم مجھے
بعد اس کے میری بس ایک دعا کے بدلے
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

آئینہ صبر و شجاعت کا بنانا میرا
ہو بہو میری ہی تصویر ہو بچہ میرا
اس کو دیکھوں تو نظر آۓ سراپا میرا
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

کوئ بے یارو مددگار اگر ہوجاۓ
التجا بہر مدد اپنی زباں پہ لاۓ
مجھ کو آواز کوئ دے وہ مدد کو آۓ
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

زندگی جس کی گزر جاۓ علمداری میں
اپنے بازو بھی کٹا دے جو فداکاری میں
سب سے آگے نظر آے جو وفاداری میں
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

نام اس کا ہو جن ہونٹوں میں وہاں پیاس نہ ہو
کوئ امید نہ ٹوٹے کوئ بے آس نہ ہو
یاد کرکے اسے تنہائ کا احساس نہ ہو
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

میرے مالک میرے ہونٹوں پہ جب آئ یہ دعا
میری آنکھوں میں نظر آنے لگی کرب و بلا
میرا شبیر مصیبت میں کھڑا ہے تنہا
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

جب وہ کربل میں ہو چوبیس پہر کا پیاسا
ہر قدم پہ اسے ایثار کا جذبہ دینا
اور میرے لعل کے ہاتھوں کو سلامت رکھنا
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

اے کلیم ہوگئ مقبول دعاۓ حیدر
اس کو میثم کہا ہے فاطمہ زہرا نے پسر
آرزو کی تھی جو علی نے حضور داور
یاالہی مجھے عباس سا بیٹا دے دے

جب میرے گھر میں علم ہے تو علمدار بھی ہو

غازی عباس جری یا الہی مجھے دے

آن لائــن فـــرش عـــزا
http://www.xainabbas.wordpress.com

شائع کردہ

اپنی راۓ دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s