Wording – Mola Mola Bol Musalman – Mir Hassan Mir

صحفہ اول / اردو نوحے / میر حسن میر / مولا مولا بول مسلماں

میر حسن میر
میر حسن میر

شاعر : —
منقبت خواں : میر حسن میر
کمپوزر : زین عباس
اس منقبت کے تحریر کرنے میں اگر کوئی غلطی سرزد ہوگئی ہوں تو اس کے لیے میں معذرت خواہ ہوں


مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول
مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول

نام محمدۖ جس طرح ہے رب کو نبیۖ کے پیارا
نام علی بھی اس طرح ہے رب کے نبیۖ کو پیارا
نقطہ نہیں دونوں پر کوئ دونوں ہیں انمول

مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول

ہجرت کی شب کون نبیۖ کے بستر پر ہے سویا
کون نبیۖ کے پاس غار میں چیخ مار کر رویا
کچھ تو سمجھ سے کام لے بھیّا من کی آنکھیں کھول

مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول

ہم ہیں در حیدر کے گداگر جو بھی چاہا پایا ہے
خود داری ہے اپنا وطیرہ ہاتھ نہیں پھیلایا ہے
ہم نہیں جانتے کیا ہوتا ہے کاسہ اور کشکول

مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول

چھوڑ چھاڑ کر ساری دنیا تو مجلس میں آۓ گا
اشک عزا کی کیا قیمت ہے تجھ کو پتا چل جاۓ گا
دونوں عالم تول جائيں گے ایک آنسو تو تول

مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول

خیبر و خندق بدر و احد یہ سب ہیں علی کے تحفے
کس نے سر میدان دیئے ہیں تیرے نبیۖ کو دھوکے
پڑھ تو ذرا تاریخ کھول کے کھل جاۓ گی پول

مولا مولا بول مسلماں مولا مولا بول

آن لائــن فـــرش عـــزا
http://www.xainabbas.wordpress.com

شائع کردہ

اپنی راۓ دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s