Wording – Uthey Kaisey, Baali Sakina(s.a) Ka Lasha – Anjum (Husaini Azadar Tanzeem)

صحفہ اول / اردو نوحے / مشہور و مــتـفــرق / اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ

نوحہ خواں : انجم
صاحب بیاض حسینی عزادار تنظیم
کمپوزر : زین عباس
اس نوحے کے تحریر کرنے میں اگر کوئی غلطی سرزد ہوگئی ہوں تو اس کے لیے میں معذرت خواہ ہوں


اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ
پریشاں ہے زنداں میں ثانی زہرا

مصیبت کی منزل یہ کتنی کڑی ہے
یتیمہ کی میت زمیں پر پڑی ہے
بنے قبر کیوں کر اٹھے کیسے لاشہ
پریشاں ہے زنداں میں ثانی زہرا

اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ

یہ غربت یہ تنہائ یہ قید خانہ
ہے زنجیر میں جکڑا بیمار بھیّا
اٹھاۓ بہن کا وہ کیسے جنازہ
پریشاں ہے زنداں میں ثانی زہرا

اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ

سکینہ تجھے اب کہاں پاؤں بیٹی
اکیلی کہاں چھوڑ کر جاؤں بیٹی
بہت تنگ و تاریک ہے قید خانہ
پریشاں ہے زنداں میں ثانی زہرا

اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ

مدد کرنے آجاؤ میرے برادر
کہاں سوگۓ میرے عباس جاکر
ذرا آکے دے دو جنازے کو کاندھا
پریشاں ہے زنداں میں ثانی زہرا

اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ

بیمار ہاتھوں میں ہتھکڑیاں پہنے
گلے میں طوق گراں بار اس کے
اتارے لحد میں بھلا کون لاشہ
پریشاں ہے زنداں میں ثانی زہرا

اٹھے کیسے بالی سکینہ کا لاشہ

آن لائــن فـــرش عـــزا
http://www.xainabbas.wordpress.com

شائع کردہ

اپنی راۓ دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s