Wording – Ho gaye Zainab(s.a) se Khafa – Nadeem Sarwar 1986

صحفہ اول / اردو نوحے / سید ندیم رضا سرور / ہو گۓ زینب سے خفا

سید ندیم رضا سرور
سید ندیم رضا سرور

شاعر : ریحان اعظمی
نوحہ خواں : ندیم رضا سرور
سال : 1986
کمپوزر : زین عباس
اس نوحے کے تحریر کرنے میں اگر کوئی غلطی سرزد ہوگئی ہوں تو اس کے لیے میں معذرت خواہ ہوں۔

آڈیو
یہ نوحہ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے نیچے دئیے گئے لنک پر کلک کریں
ہوگۓ زینب سے خفا.MP3
(Right Click / Save Target as or copy paste the link into new browser)

ویڈیو
اس ویڈیو میں یہ نوحہ ماہم، ثانیہ اور ادعیہ ہاشم نے پڑھا ہے۔

ہـوگـئــے زینب ســے خــفـا
اے میرے بابا
کیا بیٹی سے پیاری تھی قضا
اے میرے بابا
گھر میرا ویراں کیا
اے میرے بابا
کرتی ہوں آہ و بکا
اے میرے بابا
ظلم یہ کیسا ہوا
اے میرے بابا
سنتے نہیں میری صدا کس کو پکاروں
سایہ ہے میرے سر سے اٹھا کس کو پکاروں

ضرب یہ کیسی لگی
اے میرے بابا
کون تھا ایسا شقی
اے میرے بابا
ظلم کی حد ہوگئ
اے میرے بابا
روتے ہیں حسنین ذرا آنکھیں تو کھولو
دل غم سے ہے بے چین ذرا آنکھيں تو کھولو

کیسی ہے غم کی سحر
اے میرے بابا
پھٹتا ہے میرا جگر
اے میرے بابا
آپ کو یوں دیکھ کر
اے میرے بابا
چلتے ہیں خنجر میرے سینے پہ الم کے
تقدیر نے دکھلاۓ یہ دن کیسے ستم کے

آنکھ سے آنسو رواں
اے میرے بابا
سینوں سے اٹھا دھواں
اے میرے بابا
درد کی چنگاریاں
اے میرے بابا
اے ابن ملجم یہ بتا تجھ کو ملا کیا
تو نے لہو کس لیے حیدر کا بہایا

قتل نمازی ہوا
اے میرے بابا
عرش سے آئ صدا
اے میرے بابا
ہوگيا محشر بپا
اے میرے بابا
روتے ہیں جبرئیل امیں پیٹھ کے سینہ
نالے کوئ کرتا ہے کوئ پڑھتا ہے نوحہ

یاعلی مشکل کشاء
اے میرے بابا
دیکھیے اٹھ کر ذرا
اے میرے بابا
نوحہ کناں ہے فضاں
اے میرے بابا
تیغ جفا آپ پہ ظالم نے چلائ
روتی ہے زمیں آسماں دیتا ہے دہائ

کچھ تو کریں گفتگو
اے میرے بابا
بہتا ہے سر سے لہو
اے میرے بابا
آپ ہوۓ سرخرو
اے میرے بابا
مسجد کوفہ میں بپا شور و فغاں ہے
داماد نبیۖ شیر خدا قتل ہوا ہے

روتے ہيں اہل عزا
اے میرے بابا
ہوگئ مجلس بپا
اے میرے بابا
دل بھی تڑپنے لگا
اے میرے بابا
اٹھ گيا دنیا سے مددگار ہمارا
بیواؤں یتیموں کا اسیروں کا سہارا

شبر و شبیر پر
اے میرے بابا
کیجیے اٹھ کر نظر
اے میرے بابا
روتے ہیں سر پیٹھ کر
اے میرے بابا
اماں کی طرح آپ بھی اب گھر سے سدھارے
اب ہاتھ رکھے کون بھلا سر پہ ہمارے

اشکوں کا یہ سلسلہ
اے میرے بابا
جاری رہے گا سدا
اے میرے بابا
کوفہ ہو یا کربلا
اے میرے بابا
نوحہ ریحان اعظمی یہ مولا علی کا
ہے سب کے لیے افگن بخشش کا سہارا

آتی تھی ہر دم صدا
اے میرے بابا
قتل ہوۓ مرتضی
اے میرے بابا
وقت ہے فریاد کا
اے میرے بابا
قتل ہوۓ مرتضی
اے میرے بابا

آن لائــن فـــرش عـــزا
http://www.xainabbas.wordpress.com

شائع کردہ

اپنی راۓ دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s